129

ماریوپول آزاد کرالیا، روسی صدر کا پیغام

ماسکو: یوکرین جنگ میں روس کو بڑی کامیابی مل گئی، روسی فیڈریشن کی مسلح افواج اور ڈی پی آر پیپلز ملیشیا کی افواج نے ماریوپول کو آزاد کرالیا۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹ کے مطابق کریملن میں وزیر دفاع سرگئی شوئیگو نے روسی صدر کو ماریوپول کی آزادی سے متعلق رپورٹ پیش کی اور بتایا کہ روسی فیڈریشن کی مسلح افواج اور ڈی پی آر پیپلز ملیشیا کی افواج نے ماریوپول کو آزاد کرالیا ہے۔

انہوں نے روسی صدر کو بتایا کہ یہ شہر جو کہ ایک بڑا صنعتی مرکز ہے اور بحیرہ ازوف پر ایک بڑا نقل و حمل کا مرکز ہے، جسے کیف حکومت نے دوہزارچودہ میں ڈونیٹسک علاقے کا عارضی دارالحکومت قرار دیا تھا۔

کریملن میں وزیر دفاع سرگئی شوئیگو نے بتایا کہ آٹھ سال بعد ماریوپول کو ایک طاقتور گڑھ اور بنیاد پرست یوکرینی قوم پرستوں کی پناہ گاہ میں تبدیل کر دیا گیا ہے۔

اس موقع پر روسی صدر ولادی میر پوتن نے کہا کہ ماریوپول کی آزادی کو اپنی کامیابی سمجھتے ہیں، یہ جنگی آپریشن کی تکمیل ایک کامیابی ہے۔

ملاقات میں صدر پوتن نے وزیر دفاع کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ میں آپ کو مبارکباد پیش کرتا ہوں، جس پر سرگئی شوئیگو سے کہا براہ کرم ہمارے فوجیوں کو سرکاری اعزازات سے نوازنے کے لیے تجاویز پیش کریں۔

جس پر روسی صدر نے کہا کہ میری نظر میں وہ سب ہیرو ہیں جنہوں نے ماریوپول کی آزادی میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں